1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Aik khawab

Discussion in 'Roman Urdu Poetry' started by T@nHA.D!L, Jan 9, 2013.

Tags:
  1. T@nHA.D!L

    T@nHA.D!L Regular Member

    Aik khawab mohabbat ka
    Dil bhool nahi pata
    Kya bhaid anokha ha
    Jub sochney betho tau
    Kuch yaad nahi ata
    Aik pal k lye phr bi
    Wo khawab mohabbat ka
    Dil bhool nahi pata
    Be-chain jo guzri hain
    Ratein tau bohat si thein
    Karney k lye us se
    Batein tau bohat si thein
    Wo samney aya tau
    Sab bhool gayein mujhko
    Socha tau bohat lakin
    Kuch yaad nahi ata
    Aik pal k lye phe bi
    Wo khawab mohabbat ka
    Dil Bhool nahi pata
    Dil bhool nahi pata[
     
  2. نائس پوئیٹری شئیر
    اشتراک کا شکریہ
    :a030: :a030:
     

Share This Page