1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Kuch Keh Nahi Sakta

Discussion in 'Roman Urdu Poetry' started by INNOCENT BOY, Feb 11, 2013.

  1. INNOCENT BOY

    INNOCENT BOY Senior Member

    Kuch Keh Nahi Sakta

    Benaam Musafir Hoon,
    Be Naam Safar Mera..

    Kis Raah Nikal Jaon,
    Kuch Keh Nahi Sakta!

    Be Naam Meri Manzil Hai,
    Be Naam Thikana Hai..

    Kis Dar Py Main Ruk Jaon,
    Kuch Keh Nahi Sakta!

    Is Paar To Roshan Hai
    Sara Mera Rasta,

    Us Paar Andhera Ho,
    Kuch Keh Nahi Sakta!

    Tinkay Ki Tarah Main Bhi
    Beh Jaon Samandar Mein,

    Mil Jaye Ga Kinara,
    Kuch Keh Nahi Sakta!

    Mil Jaiye Gi Tabeer Mujhe
    Aik Din Mere Khwaboon Ki,

    Ya Khawab Bikhar Jaen,
    Kuch Keh Nahi Sakta!

     
  2. Very nice sharing dear
     
  3. Nice Poetry Share...
    Thanks
    ;) ;) ;)
     
  4. *MS*

    *MS* Superior Member

    بہت خوب
    مزہ آگیا
     
  5. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan Staff Member

  6. نمرہ

    نمرہ Supper Moderator

    wah nice sharing
     
  7. ~Asad~

    ~Asad~ Moderator

    بہت عمدہ اپ کا بہت بہت شکریہ
     

Share This Page