1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

جشنِ آزادی مگزین شمارہ اگست 2014

Discussion in 'ITUstad Monthly Magazines' started by PakArt, Aug 13, 2014.

Thread Status:
Not open for further replies.
  1. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan

    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]

    Hello guest, Thank you for Register or you log to see the links!


    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]

    Hello guest, Thank you for Register or you log to see the links!


    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [DMV]x1toodo[/DMV]
     
  2. نمرہ

    نمرہ Management

    boht he pyara la jawab very nice.......
     
  3. لاجواب بہت ہی پیارا میگزین شئیر کی ہے
    عمدہ شئیرنگ
    اس کی جتنی تعریف کی جائے کم ہے​
     
  4. Nandraj

    Nandraj Senior Member


    اسلام و علیکم
    بہت ہی زبردست میگزین بنایا ہے مزا آگیا
     
  5. UmerAmer

    UmerAmer VIP Member

    وعلیکم اسلام
    واہ کیا بات ہے
    بہت ہی شاندار میگزین لاجواب تحریریں
    اور بہترین ڈیزائنگ
    زبردست​
     
  6. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan

    Millions of people sacrificed their lives for Pakistan. They traveled to Pakistan without any fuel, food, shelter, and resources. Let us not forget their sacrifices, sufferings and dignity. In no way upcoming Azadi March of 2014 matches Azadi March of 1947. We should not forget those on whose shoulders we stand and those who paid the supreme price for freedom.

    آزادی حاصل کرنے والے یہ تصویری منظر دیکھئے جن لوگوں نے جانون کا نزرانہ دیکر اپنا سب کچھ لٹاکر پاکستان کا خواب سچا کر دیکھایا اور لٹتے لٹاتے اپنے قائد کے مصمم ارادے کو سلام کرتے ہوئے لبیک کہا اور اپنے کئی پیارون کی جانؤں نزرانہ دیکر ہمیں یہ سر زمین پاکستان حاصل کیا۔اپنے محسنوں کی قربانیوں کو ہمیشہ یاد رکھنا اور انکی عظمتوں کو سلام کرنا۔اور جو شہید ہوئے انکی روحوں کو تلاوت کرکے ایصالِ ثواب بھیجئے​
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
     
  7. Zaberdast ............ Lajawab magazine main aap sab ki kawish per mubarak baad pesh karta hoon.
     
  8. Bohat khubsorat banaya hy
     
  9. Jal Pari

    Jal Pari Guest

    السلام علیکم
    بہت پیارا میگزین بنایا گیا ہے
    تمام دوستوں کا بہت بہت شکریہ جنہوں نے میگزین میں حصہ لیا اور اچھی اچھی تحریریں بھیجی۔
    جزاک اللہ
    تمام ممبرز کو جشنِ آزادی بہت بہت مبارک ہو
    :a030:​
     
  10. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan

    بسم اللہ الرحمن الرحیم

    عزیز ساتھیو آج 14 اگست ہے یہ وہروز سعید ہے کہ جس روز مسلمانان ہند کی ایک صدی پر محیط کاوشیں اور قربانیاں رنگ لائیں اور ہم اس قطعہ ئے زمین کو حاصل کرنے میں کامیاب ہوئے
    پاکستان : اس ریاست کا یہ نام چوہدری رحمت علی نے اگرچہ بہت بعد میں تجویز کیا مگر اس ریاست کے خدوخال سندھ کی اس ریاست میں 900 سال پہلے نظر آگئے تھے جسے سترہ سالہ محمد بن قاسم نے ایک مسلم دوشیزہ کی عصمت کی حفاظت کے لئے ایک سرکش راجہ کو شکست فاش دینے کے بعد قائم کیا تھا
    اس ریاست کی بنیاد تو اسی دن رکھ دی گئی تھی جس دن برصغیر میں پہلا شخص مسلمان ہوا تھا
    اس ریاست کے قیام کا مقصد علاقائی حدود کی حفاظت نہیں بلکہ نظریاتی حدود کی حفاظت تھا جس کی حفاظت مسلمانان ہند کا مقصد اولین اور ان کی ضرورت تھی ۔
    اس لئے کہ دینی سماجی معاشی ثقافتی تمدنی سیاسی بنیادوں پر مسلمانوں کا ایک الگ قومی تشخص ہے ۔
    1:ہندوں کی گاو ماتا ہے جب کہ مسلمانوں کا ذبیحہ
    2: ہندوں کی چٹیا ہے جب کہ مسلمانوں کا ختنہ
    3: ہندوں کے مندر کا ناقوس جبکہ مسلمانوں کی مسجد کی اذان
    ہندوں کی چھوت چھات جب کہ مسلمانوں کی اخوت و مساوات غرضیکہ کہیں بھی میل ملاپ کی گنجائش نہ تھی نہ ہے اور نہ ہو گی ۔
    پاکستان کو حاصل کرنے کا مقصد ایک ایسی آزاد ریاست کا قیام تھا جس میں رب ذوالجلال کی حاکمیت کے سائے تلے مسلمان دین متین کے سنہری اصولوں کے مطابق اپنی زندگیاں گزار سکیں ۔
    سیالکوٹ کے اصغر سودائی نے اس تمام مقصد کو اپنی تمام جامعیت کے ساتھ اس نعرہ میں سمو دیا اور یہی نعرہ برصغیر میں بسنے والے ہر مسلمان کا نعرہ بن گیا ۔
    پاکستان کا مطلب کیا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ لا الہ الا اللہ
    پاکستان کا مطلب کیا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔لا الہ الا اللہ
    پاکستان کیا ہے مختصر اور جامع تعریف یوں ہو سکتی ہے کہ
    1: پاکستان 1857ئ کی جنگ آزادی کی تکمیل کی طرف ایک مثبت قدم ہے
    2: سر سید احمد خان کی علمی تحریک علی گڑھ کا منطقی ارتقاء ہے ۔
    3: علامہ اقبال کے خواب کی تعبیر جو انہوں نے خطبہ الا آباد میں پیش کیا۔
    4: مسلمانوں کی بے پناہ قربانیوں کا ثمر
    5: قائداعظم کی بے لوث ،بے لاگ ،بے بل ،بے خوف ،ایماندارانہ اور مدبرانہ قیادت کا ثمر ہے ۔
    اس ریاست کے حصول کے لئے مسلمانان ہند نے بہت قربانیاں دیں ۔
    کتنے لوگ تہہ تیغ ہوئے ؟ کتنی عصمتیں لٹیں ؟کتنے معصوم بچے مارے گئے؟
    اس سوال کا جواب تاریخ دان دینے سے قاصر ہیں اس کا جواب صرف پاکستان کی بنیادوں میں محفوظ ہے ۔
    کسیبہن کی عصمت تو کسی ماں کی عفت کسی معصوم کی جان تو کسی سہاگن کا جہان کسی ماں کا سپوت تو کسی باپ کا لاڈلہ پوت
    یہ سب پاکستان کے نام ہو گئے اس لئے کہ پاکستان کا قیام ایک مقصد تھا ایک ضرورت تھی
    مسلم کی آن ، مسلم کی شان ،مسلم ی جان ،مسلم کی پہچان پاکستان۔۔۔۔۔۔۔۔۔پاکستان
    اسی لئے مسلمانان ہند نے اپنا سب کچھ داو پر لگا دیا اپنا تن ،من ، دھن اس اسلامی جمہوریہ پر وار کر پھینک دیا ۔پاکستان کے قیام ،اسلام کی سربلندی کے لئے انہیں خون کا دریا پار کرنا پڑا ۔
    جب 15 اگست کو بھارت پر آزادی کی دیوی کا نزول ہوا تو امرتسر نے اس روز سعید کو عجب طور منایا کہ آسمان و زمین تھرا اٹھے ۔
    جان کونیل نے اپنی کتاب آکنلیک میں لکھا ہے کہ اس روز سکھوں کے ایک ہجوم نے مسلمان عورتوں کو برہنہ کر کے ان کا جلوس نکالا یہ جلوس شہر کے گلی کوچوں میں گھومتا رہا پھر سارے جلوس کی عصمت دری کی گئی اس کے بعد کچھ عورتوں کو کرپانوں سے ذبح کر دیا گیا باقی ککی عورتوں کو زندہ جلا دیا گیا ۔نعرے لگے واہ گرو کا خالصہ ۔واہ گرو کی فتح
    نہیں بلکہ وہ فتح تو ان ماوں بیٹیوں کی تھی جو پاکستان کے نام قربان ہو کر امر ہو گئیں آج کا دن ان کی قربانیوں کو یاد کرنے کا دن ہے ان کی عظمتوں کو سلام کرنے کا دن ہے آج کا دن ہم سے بار بار یہ سوال کرتا ہے
    یہ دن ہمیں ایک عہد کی یاد دلاتا ہے
    کہ
    [shadow="yellow"]
    تھے وہ آباء تو تمہارے ہی مگر تم کیا ہو؟
    ہاتھ پر ہاتھ دھرے منتظر فردا ہو
    خون دل دے کے نکھاریں گے رخ برگ گلا ب
    ہم نے گلشن کے تحفظ کی قسم کھائی ہے​
    [/shadow]
     
Thread Status:
Not open for further replies.

Share This Page