1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Gar Talab Sey Kuch Masewa Chahey

Discussion in 'Roman Urdu' started by نمرہ, Oct 23, 2014.

  1. نمرہ

    نمرہ Management

    Gar Talab Sey Kuch Masewa Chahey
    Un Ka Daman Nahi Chorna Chahey

    Dil Ko Deed E Rukhey Mustafa Chahey
    Ainey Key Liey Aina Chahey

    Hath Mey Daman E Mustafa Aa Giya
    Eik Gunahgar Ko Aur Kia Chahey

    Ley Chalo Aab Madine Ko Jaga Karo
    Mujh Ko Taiba Ki Abo hawa Chaey

    Gar Talab Sey Bhe Kuch Masewa Chahey
    Un ka Daman Nahi Chorna Chahey

    Tum Miley To Doalam Ki Dulat Mile
    Is Sey Barh Kar Humey Aur Kia Chahey

    Nematain Dono Alam Ki Dey Kar Mujhy
    Pochty Hein Bata Aur Kia Chahey

    Samny Sarware Do jahan Aa Gay
    Hashr Mey Aur Bismil Ko Kia Chahey

    Gar Talab Sey Bhe Kuch Masewa Chahey
    Un Ka Daman Nahi Chorna Chahey​
     
  2. UmerAmer

    UmerAmer VIP Member

    JazakAllah
     
  3. نگار

    نگار Cruise Member

    جزاک اللہ۔۔اس خوبصورت شیئرنگ کے لیے آپکا بہت بہت شکریہ‎
     
  4. ~Asad~

    ~Asad~ Management

    عمدہ بہت پیاری شرنگ اپ کا بہت بہت شکریہ
     
  5. ~Asad~

    ~Asad~ Management

    عمدہ بہت پیاری شرنگ اپ کا بہت بہت شکریہ
     

Share This Page