1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔
  2. آئی ٹی استاد کے لیے ٹیم ممبرز کی ضرورت ہے خواہش مند ممبرز ایڈمن سے رابطہ کریں
    Dismiss Notice
  3. Dismiss Notice

چينی کا زہر سالانہ 3کروڑ 50لاکھ افرا د کی ہلاک


آئی ٹی استاد کی ںئی ایپ ڈاونلوڈ کریں اور آئی ٹی استاد ٹیلی نار اور ذونگ نیٹ ورک پر فری استمال کریں

itustad

Discussion in 'General Knowledge' started by نگار, Nov 12, 2014.

General Knowledge"/>Nov 12, 2014"/>

Share This Page

  1. نگار
    Offline

    نگار Regular Member
    • 36/49

    سائنسدانوں نے دعوی کيا ہے کہ چينی ايک زہر ہے، دنيا بھر ميں چينی کے استعمال سے 3کروڑ50لاکھ(35ملين) افراد موت کے منہ ميں چلے جاتے ہيں چينی کي مقدار کا معمولی استعمال نقصان دہ نہيں ليکن زيادہ مقدار بتدريج موت کی طرف دھکيل ديتی ہے. اسکی فروخت کے لئے سگريٹ اور شراب کی طرح سخت ضوابط طے کئے جائيں.ا نسانی جسم کے ليے چينی کي مقدار مقرر ہے، طبی نکتہ نظر سے مردروزانہ 120گرام جب کہ خواتين90گرام چينی کھاسکتے ہيں .مغربي ميڈيا رپورٹس کے مطابق محققين نے خبردار کرتے ہوئے کہا کہ چيني سے تيار کردہ کھانے کي اشياء اور مشروبات کئي بيماريوں کي وجہ بنتے ہيں ان ميں موٹاپا ، عارضہ قلب ، کينسر اور جگر کے مسائل سميت کئي ديگر امراض شامل ہيں. دنيا بھر ميں35ملين افراد کي موت کا سبب بننے والي شوگر کے استعمال کيلئے ٹيکس اور قانونی ضابطے طے کيے جائيں.امريکي جريدے نيچر ميں شائع مضمون ميں امريکي مصنفين نے خبردار کرتے ہوئے کہا کہ دنيا بھر ميں موٹاپا ايک مسئلہ بن گيا ہے اوراس کي وجہ چينی ہے جو جسم ميں چربی کے ساتھ ساتھ اجزاء کے تحليلي عمل کو بھي متاثر کرتا ہے.يہ ہائی بلڈ پريشر،ہارمونز ميں غير توازن اور جگر کو نقصان پہنچاتی ہے. محققين نے ايسے تمام مشروبات جن ميں چينی کي مقدار زيادہ استعمال کي جاتی ہے ان پر بھاری ٹيکس عائد کرنے کي سفارش کي ہے. 17برس سے زائد عمر کے لوگوں کو چينی کي فروخت پر سخت قوانين مرتب کرنے اور اسکول اور کالجز کے باہر ہاکرز اور اسنيکس بار پر کڑی نظر رکھنے کي سفارش بھی کی گئی ہے ۔
     
  2. نمرہ
    Offline

    نمرہ Regular Member
    • 38/49

    hmmmm boht achi sharing ki hai.... shukriya
     
  3. Baloch 77
    Offline

    Baloch 77 Newbi
    • 6/8

    [FONT=Al_Qalam Tehreeri]Nice information you have provided us[/FONT]
     
  4. UmerAmer
    Offline

    UmerAmer Regular Member
    • 38/49

    Bohat Khoob
     

Share This Page