1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

صبح سویرے گر م پانی میں لیموں اور شہد ملا کر &

Discussion in 'Health & Diet' started by PRINCE SHAAN, Dec 22, 2014.

  1. [​IMG]

    لیموں پانی کے فوائد کے متعلق تو آپ نے بہت سنا ہوگا لیکن اگر آپ پانی کو نیم گرم کرلیں، اس میں آدھا لیموں نچوڑ لیں اور تھوڑا سا شہد بھی ڈال لیں اور اس مشروب کو صبح نہار منہ پئیں تو اس کے فوائد کا شمار ممکن نہیں۔

    چند اہم فوائد جو آپ کو اس مشروب سے حاصل ہوں گے درج ذیل ہیں۔

    1 ۔لیموں اور شہد میں پائے جانے والے الیکٹرولائٹ، پوٹاشیم، کیلشیم اور میگنیزیم جسم کو تروتازہ کرتے ہیں اور پانی کی کمی فوراً پوری ہوجائے گی۔
    2 ۔جوڑوں اور پٹھوں کا درد غائب ہوجائے گا۔
    3 ۔نظام انہظام بہتر ہوجائے گا۔
    4 ۔جسم میں خامروں کی بہتات ہوجاتی ہے۔
    5 ۔جگر کی صفائی ہوجائے گی۔
    6 ۔گلے کے انفیکشن اور سوزش سے نجات مل جاتی ہے۔
    7 ۔آنتیں صاف ہوجاتی ہیں۔
    8 ۔جسم میں بیماری سے بچانے والے اینٹی آکسیڈنٹ پیدا ہوتے ہیں۔
    9 ۔عصبی نظام مضبوط ہوتا ہے اور ڈپریشن اور ذہنی دباﺅ سے نجات ملتی ہے۔
    10 ۔خون کی شریانوں کی صفائی ہوتی ہے۔
    11 ۔بلڈ پریشر نارمل ہوجاتا ہے۔
    12 ۔یہ مشروب جسم میں PH کا لیول بڑھاتا ہے جس سے بیماریوں کی روک تھام ہوتی ہے۔
    13 ۔وٹامن سی کی مدد سے جلد صاف اور صحتمند ہوجاتی ہے۔
    14 ۔یورک ایسڈ تحلیل ہوجاتا ہے جس کی وجہ سے جوڑوں کے درد سے نجات ملتی ہے۔
    15 ۔یہ حاملہ ماﺅں کیلئے بہت ہی مفید ہے، یہ ماں کو وائرس اور فلو سے بچاتا ہے اور بچے کی ہڈیاں اور عصبی نظام خصوصاً دماغ کو مضبوط بناتا ہے۔
    16 ۔سینے کی جلن ختم ہوجاتی ہے۔
    17 ۔گردے اور پینکریاز کی پتھری تحلیل ہوجاتی ہے۔
    18 ۔لیموں کا پیکٹن فائبر وزن کم کرنے میں مدد دیتا ہے۔


    19 ۔دانت کے درد اور مسوڑھوں کے مسائل کا خاتمہ ہوتا ہے۔
    20 ۔لیموں کی الکلی خصوصیات کینسر کے خطرات کو کم کردیتی ہیں۔
     
  2. UmerAmer

    UmerAmer VIP Member

    Bohat Khoob
     

Share This Page