1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Meri jhooli mein mohabbat k siwa kuch bhi nahin

Discussion in 'Roman Urdu Poetry' started by IQBAL HASSAN, Apr 23, 2015.

  1. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Super Moderators

    Hello guest, Thank you for Register or you log to see the links!



    Dil mein ab dard-e-mohabbat k siwa kuch bhi nahin
    zindagi meri ibadat k siwa kuch bhi nahin

    Mein teri baat bargah-e-naaz mein kia paish keron
    Meri jhooli mein mohabbat k siwa kuch bhi nahin

    Aey khuda mujh say na lay meray gunahon ka hisab
    Meray paas ashk-e-nidamat k siwa kuch bhi nahin

    Woh tou mit ker mujhey mil hi gayai rahat werna
    Zindagi ranj-o-musibat k siva kuch bhi nahin
    [/COLOR]
     
  2. بہت خوب ... اچھی شیئرنگ . شکریہ

    [​IMG]
     

Share This Page