1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Jitna Shaffaf hay tera aanchal

Discussion in 'Roman Urdu Poetry' started by IQBAL HASSAN, Apr 23, 2015.

  1. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Super Moderators


    Koi mousam bhi hum ko raas nahin
    woh nahin hay tou kuch bhi paas nahin

    aik muddat say dil k paas hay woh
    aik muddat say dil udas nahin

    jub say daikha hay shaam aankhon mein
    tub say meray qayaim hawas nahin

    meray lehjay mein us ki khushbo hay
    us ki baaton mein meri baas nahin

    Jitna Shaffaf hay tera aanchal
    Utna ujla mera libaas nahin

    samnay meray aik darya hay
    hont sokhay hain phir bhi pyas nahin

    jis ko chaha hay dil-o-jan say saqi
    janay woh kion nazar shinaas nahin
     
  2. بہت خوب ... اچھی شیئرنگ . شکریہ

    [​IMG]
     

Share This Page