1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

مشورہ حاضر ہے

Discussion in 'Health & Diet' started by PRINCE SHAAN, Apr 24, 2015.

  1. مشورہ حاضر ہے


    [​IMG]


    دو منٹ میں ہچکی دور
    میں مانسہرہ کے نواحی علاقے سے تعلق رکھتا ہوں۔ میرے والد جن کی عمر لگ بھگ ستر سال ہے، پچھلے۲ماہ سے ہچکی کا شکار ہیں۔ ہچکی ہے کہ ختم ہونے کا نام ہی نہیں لیتی۔ بہت سے ٹوٹکے اور علاج کرنے کی کوشش کی لیکن شفا نہ مل سکی۔ براہ مہربانی اسمصیبت سے چھٹکارا حاصل کرنے میں ہماری مدد کریں۔
    (عبدالستار خان ۔بفہ)
    ہچکی کا علاج بتانے سے پہلے اس کی وجوہ پیش ہیں تاکہ آپ کے ساتھ ساتھ دیگر قارئین بھی ان ہدایات پر عمل پیرا ہوں اور اس کیفیت تک نوبت ہی نہ پہنچے۔ تیز گرم، تیز ٹھنڈی یا تیز مرچ مصالحہ دار غذائوں سے حتیٰ الامکان اجتناب کیجیے۔ اسی طرح بعض اوقات زیادہ پیٹ بھر کر کھانابھی باعث ہے۔ لہٰذا ان چند بے اعتدالیوں سے اجتناب کر کے اس آفت سے بچا جا سکتا ہے۔
    ہچکی کے علاج کے سلسلے میں میرے والد محترم حکیم محمد عبداللہؒ نے ایک واقعہ اپنی کتاب خواص ہلدی میں لکھا ہے۔ وہ نسخہ ہی یہاں نقل کر رہا ہوں۔ اللہ تعالیٰ سے پوری امید ہے کہ آپ کے والد کو اس نسخے سے شفا ملے گی۔
    ہلدی کا طلسمی ٹوٹکہ
    یہ طلسمی ٹوٹکہ میرے ایک جواں مرگ عزیز دوست، پنڈت کرشن کنوردت شرما کا عطا کردہ ہے۔ موصوف کے والد محترم بھی اپنے علاقہ کے مشہور ئویدوں میں سے تھے۔ ایک روز ان کے ہاں ایک مریض آیا جسے تین روز سے ہچکی لگ رہی تھی اور وہ شدت مرض سے نہایت بے چین تھا۔ پنڈت کرشن صاحب کی والدہ محترمہ بھی آیورویدک صحائف کی عالمہ تھیں۔ چنانچہ انہوں نے اشارتاً اپنے پتی کو سمجھایا کہ اس مریض کو پسی ہوئی ہلدی چلم میں رکھ کر پلا دیں۔ وید جی نے ایسا ہی کیا اور دیکھتے دیکھتے مریض کی ہچکی کش والے دھوئیں کے ساتھ ہی اڑ گئی۔
    پنڈت کرشن جی نے اس کے بعد بھی متعدد مرتبہ یہ ٹوٹکہ آزمایا اور ہمیشہ کامیاب پایا۔ خود ہمارے چند احباب نے ٹوٹکہ کو آزمایا ہے۔ انہوںنے بھی اسے مفید الاثر دیکھا ۔ پورا نسخہ درج ذیل ہے:
    ھوالشافی: پسی ہوئی ہلدی دو ماشہ کے قریب چلم میں رکھ کر پلائیں۔ یا سگرٹ کی طرح کاغذ میں لپیٹ کر اس کا دھواں کشید کرائیں۔ ان شاء اللہ شدید سے شدید ہچکی کا دورہ دوچار کش میں دور ہو جائے گا۔ سگرٹ بنا کر پلانے کی صورت میں بعض اوقات ہلدی آسانی سے نہیں جل سکتی۔ صرف کاغذ ہی جلتا ہے۔ لہٰذا اس صورت میں اگر ہلدی کے چھٹے حصہ کے برابر قلمی شورہ بھی ملا لیا جائے تو ہلدی جلانے میں ممد ثابت ہو گا۔ چلم میں رکھ کر پلانا ہو تو قلمی شورہ ملانے کی ضرورت نہیں۔
    کانچ کا شکار بچہ
    میرا بیٹا جس کی عمر ۴سال ہے، کانچ نکلنے کے مسئلے سے دوچار ہے۔ میں بلوچستان کے ایک پسماندہ علاقے میں رہتی ہوں اور یہاں علاج کی مؤثر سہولیات نہ ہونے کے باعث اس کا کوئی مستقل علاج نہیں کروا سکتی۔ اس پریشانی سے نجات حاصل کرنے کے لیے مجھے کیا کرنا چاہیے؟ (آمنہ خالد، لسبیلہ)
    آمنہ بیٹی یہ مرض عام طور پر بچوں میں ہیملتا ہے۔ بعض اوقات بڑی عمر میں بھی ہو جاتا ہے۔ شدید قبض یا مستقل پیچش رہنے سے مقعد کے عضلات ڈھیلے ہو جاتے ہیں وہ پھر خروج مقعد کا باعث بنتے ہیں۔ شروع میں تو کانچ اجابت کے وقت ہی نکلا کرتی ہے ،آہستہ آہستہ نوبت یہاں تکپہنچتی ہے کہ زور سے کھانسنے یا ہنسنے سے بھی نکل جاتی ہے۔ ذیل میں ایک دو آسان نسخے درج کر رہا ہوں۔ اللہ تعالیٰ کی ذات شفا عطا کرنے والی ہے۔
    ٭…پھٹکڑی اور مائیں (مازو سے مشابہ پھل جو بطور دوا استعمال ہوتا ہے)کو پانی میں جوش دے کر استنجا کروائیں، پھٹکڑی اور جوتے کی راکھ کانچ پر لگا کر اندر داخل کر دیں۔
    ٭…پھٹکڑی 1۱تولہ دو سیر پانی میں حل کر کے کسی کھلے برتن یا ٹب کے اندر ڈال مریض کو دس منٹ اس میں بٹھا دیں۔ ان شاء اللہ چند دنوں میں کانچ نکلنا بند ہو جائے گا۔
    گرم غذائوں اورزیادہ زور اور محنت کے کام سے بچییے۔ مریض کو نرم غذا کا استعمال کرنا چاہیے۔
    چہرے پرچھائیاں
    محترم حکیم صاحب! میری عمر ۲۱ سال ہے اگلے چند ماہ میں شادی ہونے والی ہے۔ مسئلہ یہ ہے کہ میرے چہرے پر چھائیاں اور سیاہ داغ ہیں۔ وقتاً فوقتاً کیل مہاسے بھی نکلتے رہتے ہیں۔ رنگت صاف ہونے کے باوجود ان داغوں اور چھائیوں نے میرے چہرے کو بدنما بنا دیا ہے۔ کئی اقسام کی کریمیں استعمال کر چکی ہوں لیکن کامیابی نہیں ملی۔ براہ مہربانی کوئی آسان نسخہ بتا دیجئے۔
    (بشریٰ صدیق۔ کراچی)
    بیٹی آپ کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں، اللہ تعالیٰ کی ذات نہایت کریم ہے۔ آج کل آم کا موسم ہے اور آموں کی فراوانی ہے۔ آم سے بننے والا ایک آسان چٹکلہ درج کر رہا ہوں۔ اُسے آزمانے پر ان شاء اللہ آپ بھی اس کی صداقت کی قائل ہو جائیں گی۔
    رات کے وقت آم اور جامن کی گٹھلی کا مغز پانی میں گھس کر لیپ بنائیں اور چہرہ پر لگا لیا کریں۔ صبح کے وقت نیم گرم پانی اور نیم کے صابن سے منہ دھولیں ۔ چہرہ خشک ہو جانے پر، عرق گلاب، لیموں اور گلیسرین کا محلول لگائیں۔ ان شاء اللہ چند دنوں میں تمام چھائیاں اور سیاہ داغ دور ہو جائیں گے۔
    آنکھوں سے پانی آنا
    میں درس نظامی کا طالب علم ہوں۔ دوران مطالعہ اکثر آنکھوں سے پانی بہنے لگتا ہے۔اسی باعث مطالعہ میں بہت دقت کا سامنارہتاہے۔ بار بار آنکھیں صاف کرنی پڑتی ہیں۔ مدرسے کا طالب علم ہونے کی وجہ سے مہنگا علاج نہیں کروا سکتا۔ کوئی آسان نسخہ بتائیے اللہ تعالیٰ روز محشر آپ کو اس کا اجر دے گا۔
    (سلمان اقبال لاہور)
    سلمان! اللہ تعالیٰ آپ کے علمی ذوق و شوق اور علم میں اضافہ کرے۔ آنکھوں سے پانی بہنا ایک برا مرض ہے۔ عام طور پر لوگ اس کے لیے مختلف سرمے وغیرہ استعمال کرتے ہیں۔ مگر دراصل اس کا علاج دماغ کو تقویت دینے میںپوشیدہہے۔یہ پانی دراصل دماغی کمزوری کے سبب ہی جاری ہوتا ہے۔ ازالہ کے لیے ایک آسان سا نسخہ درج ہے۔ بنائیے، استعمال کیجیے اور دعائوںمیں یاد رکھیے۔
    ھوالشافی: روزانہ بوقت صبح ۲۱ بادام کی گریاں پانی میں بھگو کر چبا لیں۔مربہ آملہ و ہڑہڑ ایک ایک دانہ صبح شام خالی پیٹ پانی یا دودھ سے کھا ئیے ۔ ان شاء اللہ چند دنوں میں پانی آنا بند ہو جائے گا۔
    گرمی سے سر درد
    میں ایک راج مستری ہوں محنت مزدوری کر کے اپنا پیٹ پالتا ہوں۔ جیسے ہی موسم گرما شروع ہو کام کرنا انتہائی دشوار ہو جاتا ہے۔ گرمی کی وجہ سے میرے سر میں شدید قسم کا دردہونے لگتا ہے ۔ آنکھوں سے حدت نکلنے لگتی ہے اور دل گھبراتا ہے۔ جسم بے جان سا ہو جاتا ہے۔ براہ مہربانی اس بیماری کا علاج بتائیںتاکہ بیوی بچوں کی خاطر روزی کمانے کے قابل ہوں سکوں۔ (نعیم غوری۔ ننکانہ صاحب)
    اکثر حساس طبیعت کے لوگ گرمیوں میںاس درد سر کا شکار ہو جاتے ہیں۔ گرمی کی علامت معلوم کرنے کے لیے آسان ترکیب یہ ہے۔ مریض کے سر پر ہاتھ لگانے سے وہ گرم معلوم ہو یا دھوپ میں چلنے پھرنے یا آگ کے نزدیک بیٹھنے سے سر درد کی شکایت ہو تو یہ گرمی سے ہونے والا سردرد ہوگا۔
    گرمی کے سر دردسے نجات پانے کا ایک آسان سا نسخہپیش ہے۔ امید ہے استعمال کرنے کے بعد دست بدعا ہوں گے۔
    ھوالشافی: تربوز کے بیج یا مغز لے کر انھیں کھرل میں ڈالیے اور پانی شامل کر کے خوب گھوٹیں۔ یہاں تک کہ مکھن کی طرح نرم ہو کر ملائم لیپ بن جائے۔ اس کو پیشانی پر لیپ کر لیں۔ اللہ کے فضل و کرم سے چند منٹ میں سر درد دور ہو جائے گا۔
    دوسرا نسخہ یہ ہے : ۸تربوز کا گودا ململ کے کپڑے سے نچوڑ لیںاس میں قدرے مصری یا چینی ملا کر روزانہ صبح و شام پی لیں۔ ان شاء اللہ مستقل طور پر مرض سے جان چھٹ جائے گی۔
     
  2. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Management



    بہت ھی عمدہ شیرینگ ھے ۔
    اپ کابہت شکریہ۔ نوازش ۔
    [​IMG]

     
  3. IQBAL

    IQBAL Cruise Member

    بہت اچھی شیئرنگ کی ہے آپ نے ... شکریہ
     
  4. *Shan Jee*

    *Shan Jee* Designer

    بہت مفید اور کارآمد شئیرنگ ہے۔
    بہت اعلیٰ جناب۔​
     

Share This Page