1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔
  2. آئی ٹی استاد کے لیے ٹیم ممبرز کی ضرورت ہے خواہش مند ممبرز ایڈمن سے رابطہ کریں
    Dismiss Notice
  3. Dismiss Notice

آخری چہارشنبہ،اسلامی تصور


آئی ٹی استاد کی ںئی ایپ ڈاونلوڈ کریں اور آئی ٹی استاد ٹیلی نار اور ذونگ نیٹ ورک پر فری استمال کریں

itustad

Discussion in 'General Topics Of Islam' started by IQBAL HASSAN, May 29, 2015.

General Topics Of Islam"/>May 29, 2015"/>

Share This Page

  1. IQBAL HASSAN
    Offline

    IQBAL HASSAN Designer
    • 63/65

    View attachment 571

    آخری چہارشنبہ،اسلامی تصور
    View attachment 571
    یہ حقیقت ہے کہ ایک دن دوسرے دن پر فضیلت وبرتری رکھتا ہے، ایک وقت دوسرے وقت کی بہ نسبت زیادہ برکت ورحمت والا ہوتا ہے، لیکن فی نفسہ کسی وقت یا دن میں نحوست کا تصور غیراسلامی نظریہ ہے، جہاں تک چہارشنبہ کی بات ہے توصحیح حدیث پاک میں اس کی فضیلت آئی ہے، صحیح مسلم شریف اور مسند امام احمد وغیرہ میں سیدنا ابوہریرہ رضی اللہ عنہ سے تفصیلی روایت مذکورہے :
    عَنْ أَبِى هُرَيْرَةَ قَالَ أَخَذَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم بِيَدِى فَقَالَ:خَلَقَ اللَّهُ عَزَّ وَجَلَّ التُّرْبَةَ يَوْمَ السَّبْتِ۔۔۔وَخَلَقَ النُّورَ يَوْمَ الأَرْبِعَاءِ۔
    ترجمہ:حضورصلی اللہ علیہ واٰلہ وسلم نے ارشادفرمایا ۔ ۔ ۔ اور اللہ تعالی نے نور کو چہارشنبہ کے دن پیدا فرمایا۔
    (صحیح مسلم شریف، کتاب صفۃالمنافقین واحکامہم، باب صفۃ القیامۃ والجنۃ والنارج2 ص371 ، حدیث نمبر:7231- مسند امام احمد، مسند أبى هريرة ، حدیث نمبر: 8563- السنن الكبرى للبيهقي،ج:9،ص:3- السنن الكبرى للنسائي، حدیث نمبر: 11010-معجم اوسط طبرانی، باب الباء، من اسمه بكر، حدیث نمبر: 3360-)
    مذکورہ حدیث پاک سے معلوم ہوا کہ چہارشنبہ وہ مبارک ومقدس دن ہے جس میں نور کی پیدائش ہوئی لہذا یہ تصورغیر درست ہے کہ اس میں کوئی بڑااور اہم کام نہیں کرنا چاہئے-
    اس دن کوئی بھی جائزخوشی والا کام انجام دیناان شاء اللہ تعالی بابرکت ہی ہوگا۔
    امام سخاوی نے مقاصد حسنہ میں برہان الاسلام کی ’’تعلیم المتعلم‘‘ کے حوالہ سے ذکر کیا کہ وہ اپنے استاذ گرامی صاحب ہدایہ علامہ مرغینانی رحمۃ اللہ علیہ کا طریقہ بیان کرتے ہیں کہ آپ چہارشنبہ کے دن سبق کے آغاز کا اہتمام کیاکرتے اور اس سلسلہ میں یہ حدیث پاک روایت فرمایاکرتے کہ حضرت نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشادفرمایا: چہارشنبہ کے دن جس چیز کابھی آغاز کیا جائے وہ پایۂ تکمیل کو پہنچتی ہے۔

    ذکر برهان الإسلام فی کتابه ( تعليم المتعلم ) عن شيخه المرغينانی صاحب الهداية فی فقه الحنفية أنه کان يوقف بداية السبق علی يوم الاربعاء وکان يروی فی ذلک بحفظه ويقول قال رسول الله ( ما من شیء بدء به يوم الأربعاء إلا وقد تم)۔ (المقاصد الحسنۃ ،حرف المیم(
    اسی وجہ سے عالم اسلام کی شہرۂ آفاق اسلامی یونیورسٹی جامعہ نظامیہ میں چہارشنبہ کے دن دروس کے آغاز کا اہتمام کیا جاتا ہے۔
    تفسیر روح البیان میں سورۃ التوبۃ آیت نمبر37 کے تحت مذکور ہے:
    وانما الزمان کله خلق الله تعالی وفيه تقع اعمال بنی آدم فکل زمان اشتغل فيه المؤمن بطاعة الله فهو زمان مبارک وکل زمان اشتغل فيه بمعصية الله فهو مشؤم عليه فالشؤم فی الحقيقة هو المعصية ۔
    ترجمہ: ہر وہ لمحہ جس میں بندہ مومن اطاعت الہی میں مصروف رہا ہے وہ اس کے حق میں مبارک ومسعود ہے اور ہر وہ لمحہ جس میں وہ اللہ تعالی کی نافرمانی میں مشغول رہا ہے وہ اس کے حق میں بے برکت ہے‘ دراصل نحوست وبے برکتی گناہ میں ہے۔
    از:حضرت ضیاء ملت مولانا مفتی حافظ سید ضیاء الدین نقشبندی دامت برکاتہم العالیہ
    View attachment 571
     
  2. UmerAmer
    Offline

    UmerAmer Regular Member
    • 38/49

    جزاک اللہ خیرا​
     
  3. PRINCE SHAAN
    Online

    PRINCE SHAAN Guest

    جزاک اللہ خیرا
    آپ سدا خوش رہئے

     
  4. PakArt
    Offline

    PakArt ITUstad dmin Staff Member
    • 83/98

    :salam1:
    [​IMG]
    [​IMG]
    ماشا اللہ بہت عمدہ اشتراک کیا ہے۔ آپکی اور عمدہ تھریڈ کا انتطار رہے گا۔شکریہ​
     

Share This Page