1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔
  2. آئی ٹی استاد کے لیے ٹیم ممبرز کی ضرورت ہے خواہش مند ممبرز ایڈمن سے رابطہ کریں
    Dismiss Notice
  3. Dismiss Notice

مجھ سے پہلی سی محبت مری محبوب نہ مانگ


آئی ٹی استاد کی ںئی ایپ ڈاونلوڈ کریں اور آئی ٹی استاد ٹیلی نار اور ذونگ نیٹ ورک پر فری استمال کریں

itustad

Discussion in 'Poetry' started by *Shan Jee*, Oct 27, 2015.

Poetry"/>Oct 27, 2015"/>

Share This Page

  1. *Shan Jee*
    Offline

    *Shan Jee* Designer
    • 38/49

    ’’مجھ سے پہلی سی محبت مری محبوب نہ مانگ
    میں نے سمجھاتھا کہ توہے درخشاں ہے حیات

    تیرا غم ہے تو غمِ دہر کا جھگڑا کیا ہے
    تیری صورت سے ہے عالم میں بہاروں کو ثبات
    تیری آنکھوں کے سوا دنیا میں رکھا کیا ہے؟
    تومل جائے تو تقدیر نِگُوں ہوجائے
    یوں نہ تھا،میں نے فقط چاہاتھا یُوں ہوجائے
    اور بھی دُکھ ہیں زمانے میں محبت سے سوا
    راحتیں اور بھی وصل کی راحت کے سوا
    ان گنت صدیوں کے تاریک بہیمانہ طلسم
    ریشم و اطلس و کمخاب میں بُنوائے ہوئے
    جا بجا بکتے ہوئے کوچہ و بازار میں جسم
    خاک میں لتھڑے ہوئے خون میں نہائے ہوئے
    جسم نکلے ہوئے امراض کے تنوروں سے
    پیپ بہتی ہوئی گلتے ہوئے ناسوروں سے
    لوٹ جاتی ہے ادھر کوبھی نظرکیا کیجئے
    اب بھی دلکش ہے ترا حسن ،مگرکیا کیجئے
    اور بھی دکھ ہیں زمانے میں محبت کے سوا
    راحتیں اور بھی ہیں وصل کی راحت کے سوا
    مجھ سے پہلی سی محبت مری محبوب نہ مانگ
     

Share This Page