1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

ﺩﻧﯿﺎ ﮐﺎ ﮐﭽﮫ ﺑﺮﺍ ﺑﮭﯽ ﺗﻤﺎﺷﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ

Discussion in 'Poetry' started by Ahsaaan, Oct 29, 2015.

  1. Ahsaaan

    Ahsaaan Senior Member




    ﺩﻧﯿﺎ ﮐﺎ ﮐﭽﮫ ﺑﺮﺍ ﺑﮭﯽ ﺗﻤﺎﺷﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ
    ﺩﻝ ﭼﺎﮨﺘﺎ ﺗﮭﺎ ﺟﺲ ﻃﺮﺡ ﻭﯾﺴﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ
    ﺗﻢ ﺳﮯ ﻣﻠﮯ ﺑﮭﯽ ﮨﻢ ﺗﻮ ﺟﺪﺍﺋﯽ ﮐﮯ ﻣﻮﮌ ﭘﺮ
    ﮐﺸﺘﯽ ﮨﻮﺋﯽ ﻧﺼﯿﺐ ﺗﻮ ﺩﺭﯾﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ
    ﮐﮩﺘﮯ ﺗﮭﮯ ﺍﯾﮏ ﭘﻞ ﻧﮧ ﺟﯿﺌﯿﮟ ﮔﮯ ﺗﺮﮮ ﺑﻐﯿﺮ
    ﮨﻢ ﺩﻭﻧﻮﮞ ﺭﮦ ﮔﺌﮯ ﮨﯿﮟ ﻭﮦ ﻭﻋﺪﮦ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ
    ﮐﺎﭨﮯ ﮨﯿﮟ ﺍﺱ ﻃﺮﺡ ﺳﮯ ﺗﺮﮮ ﺑﻐﯿﺮ ﺭﻭﺯ ﻭ ﺷﺐ
    ﻣﯿﮟ ﺳﺎﻧﺲ ﻟﮯ ﺭﮨﺎ ﺗﮭﺎ ﭘﺮ ﺯﻧﺪﮦ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ
    ﺁﻧﮑﮭﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﺩﯾﮑﮫ ﺩﯾﮑﮫ ﮐﮯ ﺧﻮﺍﺏ ﺁ ﮔﺌﯽ ﮨﯿﮟ ﺗﻨﮓ
    ﺩﻝ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﺍﺏ ﻭﮦ ﺷﻮﻕ، ﻭﮦ ﻟﭙﮑﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ
    ﮐﯿﺴﮯ ﻣﻼﺋﯿﮟ ﺁﻧﮑﮫ ﮐﺴﯽ ﺁﺋﻨﮯ ﺳﮯ ﮨﻢ
    ﺍﻣﺠﺪ ﮨﻤﺎﺭﮮ ﭘﺎﺱ ﺗﻮ ﭼﮩﺮﮦ ﻧﮩﯿﮟ ﺭﮨﺎ



     
  2. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan

    [FONT=&quot]:salam1:

    [FONT=&quot][​IMG][/FONT]
    [FONT=&quot][​IMG][/FONT]
    [FONT=&quot][​IMG][/FONT]
    [FONT=&quot][​IMG][/FONT]
    [FONT=&quot]ماشا اللہ بہت عمدہ اشتراک کیا ہے۔ آپکی اور عمدہ تھریڈ کا انتطار رہے گا۔شکریہ[/FONT]​
    [/FONT]
     

Share This Page