1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

قطعہ.دن کی اک اک بوند

Discussion in 'Urdu Shair or Qita' started by PakArt, Jul 23, 2016.

  1. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan Staff Member

    دن کی اک اک بوند گراں ہے ، اک اک جرعہِ شب نایاب
    شام و سحر کے پیمانے میں جو کچھ ہے ڈر ڈر کے پیو
    آہستہ آہستہ برتو گنتی کی ان سانسوں کو
    دل کے ہاتھوں شیشہِ جاں ہے ، قطرہ قطرہ کر کے پیو​​
     
  2. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan Staff Member

    تیری ذات سے میری ذات تک جو ہے فاصلہ وہ نہ مٹ سکا
    میری زندگی یونہی کٹ گئی میرے ساتھ تو نہیں چل سکا

    میں اذل سے یونہی پڑا ہوا تیرے واسطے کسی راہ میں
    مگر اے صنم میرے واسطے کوئی آہ تو نہ جگا سکا

    وہ جو کہتے ہے کہ امید رکھ کوئی آئے گا تیرے پاس بھی
    میں جانتا ہوں ابس ہے سب وہ کوئی اور بھی نہیں آسکا​
     
  3. UmerAmer

    UmerAmer VIP Member

    واہ انکل
    زبردست​
     

Share This Page