1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

دیکھ ہماری دید کے کارن

Discussion in 'Ibn E Insha' started by Ziaullah mangal, Dec 9, 2015.

  1. Ziaullah mangal

    Ziaullah mangal Well Wishir


    دیکھ ہماری دید کے کارن

    دیکھ ہماری دید کے کارن کیسا قابلِ دید ہوا
    ایک ستارہ بیٹھے بیٹھے تابش میں خورشید ہوا

    آج تو جانی رستہ تکتے، شام کا چاند پدید ہوا
    تو نے تو انکار کیا تھا، دل کب ناامید ہوا

    آن کے اس بیمار کو دیکھے، تجھ کو بھی توفیق ہوئی
    لب پر اس کے نام تھا ترا، جب بھی درد شدید ہوا

    ہاں اس نے جھلکی دکھلائی، ایک ہی پل کودریچےمیں
    جانو اک بجلی لہرائی، عالم ایک شہید ہوا

    تو نےہم سےکلام بھی چھوڑا، عرضِ وفا کے سنتے ہی
    پہلے کون قریب تھا ہم سے، اب تو اور بعید ہوا

    دنیا کے سب کاج چھوڑے، نام پہ ترے انشا نے
    اور اسے کیا تھوڑے غم تھا؟ تیرا عشق مزید ہوا​

     

Share This Page