1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

کسی کی آنکھ جو پرنم نہیں ہے

Discussion in 'Amjad Islam Amjad' started by nizamuddin, Jan 20, 2016.

  1. nizamuddin

    nizamuddin Regular Member

    کسی کی آنکھ جو پرنم نہیں ہے
    نہ سمجھو یہ کہ اس کو غم نہیں ہے
    سوادِ درد میں تنہا کھڑا ہوں
    پلٹ جاؤں مگر موسم نہیں ہے
    سمجھ میں کچھ نہیں آتا کسی کی
    اگرچہ گفتگو مبہم نہیں ہے
    سلگتا کیوں نہیں تاریک جنگل
    طلب کی لو اگر مدھم نہیں ہے
    یہ بستی ہے ستم پروردگاں کی
    یہاں کوئی کسی سے کم نہیں ہے
    کنارا دوسرا دریا کا جیسے
    وہ ساتھی ہے مگر محرم نہیں ہے
    دلوں کی روشنی بجھنے نہ دینا
    وجودِ تیرگی محکم نہیں ہے
    میں تم کو چاہ کر پچھتا رہا ہوں
    کوئی اس زخم کا مرہم نہیں ہے
    جو کوئی سن سکے امجد تو دنیا
    بجز اک بازگشتِ غم نہیں ہے
    (امجد اسلام امجد)


    [​IMG]
     
    UrduLover likes this.
  2. boht khoooooooob
     
  3. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Management




    کسی کی آنکھ جو پرنم نہیں ہے
    نہ سمجھو یہ کہ اس کو غم نہیں ہے
    سوادِ درد میں تنہا کھڑا ہوں
    پلٹ جاؤں مگر موسم نہیں ہے
    سمجھ میں کچھ نہیں آتا کسی کی
    [​IMG]

    بہت ہی عمدہ
    بہت ہی مزیدار
    مزید اچھی شیرینگ کا انتیظار رھے گا ۔

    [​IMG]
     
  4. UrduLover

    UrduLover Work hard. Dream big. Staff Member

    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    [​IMG]
    نظام ایدین آپ تو عید کا چاند ہو گئے۔چوہدویں کا چاند بنکر لوٹ آیئے
     

Share This Page