1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

دل میں اک لہر سی اٹھی ہے ابھی

Discussion in 'Nasir Kazmi' started by nizamuddin, Jan 22, 2016.

  1. nizamuddin

    nizamuddin Regular Member

    دل میں اک لہر سی اٹھی ہے ابھی
    کوئی تازہ ہوا چلی ہے ابھی
    شور برپا ہے خانہ دل میں
    کوئی دیوار سی گری ہے ابھی
    بھری دنیا میں جی نہیں لگتا
    جانے کس چیز کی کمی ہے ابھی
    یاد کے بےنشان جزیروں سے
    تیری آواز آ رہی ہے ابھی
    سو گئے لوگ اس حویلی کے
    ایک کھڑکی مگر کھلی ہے ابھی
    تم تو یارو ابھی سے اٹھ بیٹھے
    شہر میں رات جاگتی ہے ابھی
    وقت اچھا بھی آے گا ناصر
    غم نہ کر زندگی پڑی ہے ابھی
    ناصر کاظمی
     
  2. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Super Moderators

    سو گئے لوگ اس حویلی کے
    ایک کھڑکی مگر کھلی ہے ابھی
    تم تو یارو ابھی سے اٹھ بیٹھے
    شہر میں رات جاگتی ہے ابھی
    وقت اچھا بھی آے گا ناصر
    غم نہ کر زندگی پڑی ہے ابھی
    [​IMG]

     
  3. Aqibimtiaz786

    Aqibimtiaz786 mr.anjaan

    Bht Khoooob Share Krne Ka Shukriya.........
     

Share This Page