1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Shama Aur Parwana

Discussion in 'Baat Cheet' started by ғσяυм gυяυ, May 31, 2013.

  1. شمع و پروانہ

    پروانہ تجھ سے کرتا ہے اے شمع پيار کيوں
    يہ جان بے قرار ہے تجھ پر نثار کيوں
    سيماب وار رکھتی ہے تيری ادا اسے
    آداب عشق تو نے سکھائے ہيں کيا اسے؟
    کرتا ہے يہ طواف تری جلوہ گاہ کا
    پھونکا ہوا ہے کيا تری برق نگاہ کا؟
    آزار موت ميں اسے آرام جاں ہے کيا؟
    شعلے ميں تيرے زندگی جاوداں ہے کيا؟
    غم خانہ جہاں ميں جو تيری ضيا نہ ہو
    اس تفتہ دل کا نخل تمنا ہرا نہ ہو
    گرنا ترے حضور ميں اس کی نماز ہے
    ننھے سے دل ميں لذت سوز و گداز ہے
    کچھ اس ميں جوش عاشق حسن قديم ہے
    چھوٹا سا طور تو يہ ذرا سا کليم ہے
    پروانہ ، اور ذوق تماشائے روشنی
    کيڑا ذرا سا ، اور تمنائے روشنی​
     
  2. Net KiNG

    Net KiNG VIP Member

    Thanks For Sharing
     
  3. Hello guest, Thank you for Register or you log to see the links!

    Thanks For Sharing
    Click to expand...
    Shukriya Visit Karnay Aur Comments Denay K Liye ...
     

Share This Page