1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

Discussion in 'Funny Poetry' started by Faheem Aman Memon, Jun 7, 2013.

  1. Faheem Aman Memon

    Faheem Aman Memon New Member

    کس کمینے کی ہے سازش، کس چوَل کی چال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    لوڈشیڈنگ نے دئیے ہیں اس طرح کے رتجگے
    کوئی دوزخ میں بھی جائے گر تو گرمی نہ لگے
    میرے پیارے واپڈا کی بس یہی اوقات ہے
    چار گھنٹے لائٹ ہے اور پھر اندھیری رات ہے
    بددعا دے دے کر تالو خشک اور منہ لال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    بند سی این جی سٹیشن نہ ملے پٹرول ہی
    پڑ گیا ڈاکہ جہاں ناکہ تھا خاصا کول ہی
    دیکھ کر منظر سارا ہاتھ کیا ان کے ہلیں
    جن کہ پیٹی میں سے پسٹل کی جگہ سگریٹ ملیں
    ڈاکوؤں کو علم ہے سرکار اپنے نال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    کس قدر پہنچے ہوئے کہ بس زباں ان کی ہلے
    چائے پینے کے لئے دو چار ارب قرضہ ملے
    کون کہتا ہے سارا معاف کرواتے ہیں یہ
    جو کہیں تو چار پانچ سو واپس بھی لوٹاتے ہیں یہ
    اور پھر یہ بولتے ہیں گورنمنٹ کنگال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    گالیاں نکلیں زباں سے ہاتھ سے پتھر چلا
    نہ چلا تو ملک کا قانون نہ ان پر چلا
    چل گئے گھونسے، چپیڑیں اور اینٹیں چل گئیں
    کرسیاں تو چھوڑئیے، میک اپ کی کٹیں چل گئیں
    یہ اسمبلی ہے جہاں لوٹا بنا فٹبال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    جیب میں دھیلا نہیں اور چانپ کھانے کی لگن
    دوڑ جا تیرا یہاں کیا کام ہے، بولا مٹن
    چھوڑ دے میری طلب کہنے لگا مرغ چمن
    تو اگر میرا نہیں بنتا نہ بن اپنا تو بن
    تیرے حصے میں فقط چٹنی ہے یا پھر دال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    حال پتلے ہو چکے ہیں اب سبھی کے کیا کریں
    قیمتیں سن کر پڑیں دورے غشی کے کیا کریں
    ریٹ ڈیلی چینج ہونے لگ گئے ہر چیز کے
    صرف گاڑی ہی نہیں اب ہیں چکن بھی لیز پہ
    ہر بجٹ کا سلسلہ سمجھو کہ سارا سال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    باپ کا بچوں کے دل میں اب کہاں وہ ڈر رہا
    اور باتیں چھوڑئیے، شوہر نہ اب شوہر رہا
    ہاؤس وائف تھی کبھی قصہ پرانا ہے جناب
    اب یہاں پر ہاؤس ہسبنڈ کا زمانہ ہے جناب
    گھر گرہستی بیویوں کے واسطے جنجال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    یا ہوں پونی بال اس کے یا نِرا گنجا ملے
    اب مفکّر وہ ہے جس کے ہاتھ میں سوٹا ملے
    شاعری کے نام پر بھی کیا نیا جذبہ ملے
    اب کہیں مُنّی ملے، بےبو ملے، شِیلا ملے
    اب یہاں فیض ہے، غالب ہے نہ اقبال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے

    ڈنگ ٹپاؤ سوچ ہے اور چل چلاؤ کام ہے
    جس قدر عہدہ بڑا ہے اس قدر بدنام ہے
    تھا انگوٹھا چھاپ، لیکن اک بڑا افسر رہا
    کام جس کا جو نہیں ہے وہ وہی ہے کر رہا
    محکمہ اس واسطے ہر ایک ہی بے حال ہے
    کیا کریں اس ملک میں ہر چیز کی ہڑتال ہے
     
  2. :pagal::pagal:
    ;)
     
  3. Ali

    Ali supper Hero

    :pagal: :pagal:

    :o
     
  4. IQBAL

    IQBAL Guru Member

    BAHUT KHOOB
    VERY NICE SHARING
    [​IMG]

     
  5. Danger Avenger

    Danger Avenger Cruise Member

  6. :pagal::pagal::pagal::pagal::pagal:
     
  7. Net KiNG

    Net KiNG VIP Member

    :pagal: :pagal: :pagal:

    :pagal: :pagal: :pagal:

    :pagal: :pagal: :pagal:
     
  8. :pagal:

    ;)​
     
  9. Princess Hina

    Princess Hina Regular Member

    OHH ... utni bahi apna mulk kia nahi karni chaya..
     

Share This Page