1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

عدت وفات سےمتعلق ایک مسلہ

Discussion in 'General Topics Of Islam' started by IQBAL HASSAN, Nov 28, 2016.

  1. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Super Moderators

    [​IMG]
    عدت وفات سےمتعلق ایک مسلہ


    کسی خاتون کے شوہر کا انتقال ہوجائے اور وہ حاملہ نہ ہو تو ضروری ہیکہ چار مہینے دس دن عدت گذارے، ونیز عدت وفات گذارنے والی خاتون پر شرعا واجب ہے کہ وہ عدت ختم ہونے تک اسی مکان میں رہے جہاں شوہر کے حین حیات وہ رہا کرتی تھی، اگر کسی ضرورت کے تحت گھر سے باہر جائے یا والدین سے ملنے انکے گھر آئے اور رات کا کچھ حصہ گذر بھی جائے تو کوئی مضائقہ نہیں لیکن اپنے مکان میں رات گذارنا ضروری ہے جیساکہ فتاوی عالمگیری ج1،ص 534/535،كتاب الطلاق,الباب الرابع عشر في الحداد،میں ہے
    : الْمُتَوَفَّى عَنْهَا زَوْجُهَا تَخْرُجُ نَهَارًا وَبَعْضَ اللَّيْلِ وَلَا تَبِيتُ فِي غَيْرِ مَنْزِلِهَا.... لَوْ كَانَتْ زَائِرَةً أَهْلَهَا أَوْ كَانَتْ فِي غَيْرِ بَيْتِهَا لِأَمْرٍ حِينَ وُقُوعِ الطَّلَاقِ انْتَقَلَتْ إلَى بَيْتِ سُكْنَاهَا بِلَا تَأْخِيرٍ وَكَذَا فِي عِدَّةِ الْوَفَاة-

    خاندان کی بعض عورتوں کا کہنا '' کہ بیوہ عورت کو چالیس دن سے پہلے ایک رات اپنے میکہ میں رہنا ضروری ہے"شرعا درست نہیں،آپ کی چچی صاحبہ ان باتوں کی طرف توجہ نہ کریں اور شرعی حکم کے مطابق ختم عدت تک اپنے مکان میں ہی رہیں،جب والدین اور دیگر رشتہ داروں سے ملاقات کے لئے جائيں تب بھی وہ رات اپنے گھر آکر ہی گذاریں-
    واللہ اعلم بالصواب-



    [​IMG]

     
  2. muzafar ali

    muzafar ali Legend

    Jazak Allah
     
  3. Ghulam Rasool

    Ghulam Rasool Super Moderators

    very nice sharing dear ..................................
     

Share This Page