1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

قرآن کریم میں فرشتوں کا ذکر

Discussion in 'Quran e Kareem' started by IQBAL HASSAN, Dec 3, 2016.

  1. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Super Moderators

    [​IMG]
    قرآن کریم میں فرشتوں کا ذکر

    فرشتوں پر ایمان لانے کا ذکر قرآن کریم میں آیا ہے‘ ارشاد الٰہی ہے: کُلٌّ آمَنَ بِاللّہِ وَمَلآئِکَتِہِ وَکُتُبِہِ وَرُسُلِہِ۔ ترجمہ: سب اللہ پر‘ اس کے فرشتوں‘ اس کی کتابوں اور اس کے رسولوں پر ایمان لائے۔ (سورۃ البقرۃ: 285) نیز ارشاد الٰہی ہے : وَلَکِنَّ الْبِرَّ مَنْ آمَنَ بِاللّہِ وَالْیَوْمِ الآخِرِ وَالْمَلآئِکَۃِ وَالْکِتَابِ وَالنَّبِیِّیْنَ۔ ترجمہ: لیکن نیک وہ شخص ہے جو اللہ پر‘ روز قیامت پر‘ فرشتوں پر‘ کتاب (قرآن) پر اور انبیاء پر ایمان لائے۔ (سورۃ البقرۃ :177) اس کے علاوہ بہت ساری آیات قرآنیہ و احادیث شریفہ مبارکہ ہیں جن سے معلوم ہوتا ہے کہ فرشتے اللہ تعالیٰ کی ایک مخلوق ہیں اور ان پر ایمان لانا اوران کے وجود کو ماننا ضروری ہے۔

    [​IMG]
     

Share This Page