1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

نیا سال اور جان ہماری جائے

Discussion in 'حالاتِ حاضرہ' started by DilawerRizvi, Dec 24, 2016.

  1. DilawerRizvi

    DilawerRizvi Moderator

    پاکستان میں ویسے تو کافی تہوار منا نے کا رواج ہے کچھ تو قدیمی ہیں کچھ ہم لوگوں کی پیداوار ہیں کچھ ہم نے مغرب مطلب باہر کی دنیا سے سکے ہیں گورں کو باپ یاد آگیا ہپی فادر ڈے کا دن وجود میں آگیا ماں یاد آگی تو مدر ڈے پیار آگیا محبوبہ پر تو اس دن ہم لوگوں کے پاس پھول نایاب ہو جا تھے ہیں ان لوگوں کے دن اپنانے کا ایک جنون سوار ہےلباس کہانا پینا رہن سہن کافی کچھ اپنا لیا ہے نہیں اپنایا تو ان جسی ایمانداری اپنے ملک کے لئے وفاداری ایک قوم ہونے کا ثبوت یہ چیزیں کچھ مشکل ہے اس لئے ہم لوگوں کو پسند نہیں اج کل بلک فراہیڈے بھی گورں کی مہربانی ہے ہم پر جو سامان کسی کام کا نہیں لونڈےبازار میں جانے کا ہوتا ہے اس کی سیل لگا دی ہم لوگ نے یہ تہوار بھی اپنا لیا لوگوں نے خریداری کی کیا کمال کی بات ہے تہواروں کو اپنانا پھر اس میں اپنی ہی کچھ کارستانی کرنے کے ماہر ہیں ہم اتنے سارے تہوار ہے کس پر بات کرے کس پر نہیں ایک تہوار ہیں نیاسال مبارک ہو جو مغرب کا تحفہ ہے جب بھی نیاسال شروع ہوتا ہے ہر طرف فائرنگ شروع ہوجاتی ہے کافی لوگ زخمی اور بہت سارے اپنی جان سے چلے جاتھے ہیں جس پر حکومت نے پابندی لگا رکھی ہے لیکن ہم لوگوں کو تہوار منانا ہوتا ہے ویسے پوری دنیا میں نیاسال شروع ہو تو لوگ جشن کرتے ہیں ہم لوگوں کا انداز الگ ہے شادی میں فائرنگ کر کے چار پانچ لوگوں کو زخمی نہ کرے تو شادی پوری نہیں ہوتی کافی نیوز میں دیکھا ہے دولہے کو ہی زخمی کر دے تھے ہیں خوشی کا مطلب یہ نہیں ہوتا کسی کے گھر میں ماتم کروا دو-

    ویسے ہی دھماکے اور دہشتگردی سے عوام پریشان ہے سب کا انداز ہوتا ہے خوشی منانے کا اپ دوستوں کے ساتھ سمندر پر جائیں یا پارٹی کریں تیز آواز میں گانہ بجانہ کرے کسی کو پریشانی نہیں خوش ہو نہ سب کا حق ہے نوجوانوں کو تفریحی کرنے کے لئے دن مل جاتا ہے روڈ پر لوگوں کا رش ہو تھا ہے خواتین بھچے سب نکل تھے ہیں اس طرح لوگوں کا گاڑیوں میں سے یا گلی محلوں سے ہوای فائرنگ کرنہ کسی جانی نقصان کا سبب بن سکتا ہے نیا سال شروع ہونے میں کچھ دن ہیں لہذا سب کو سوچنا چاہئے اس سال کم سے کم فائرنگ سے شروع نہ کرے حکومت کو چاہئے اور سختی قانون نافذ کرنے والے ادارے اس امر کو یقینی بنائے کے اس سال کی امد پر کوئ زخمی یا موت کے منہ میں نہ جائے-​
     
  2. IQBAL HASSAN

    IQBAL HASSAN Management

    33agebo.gif
    بہت ھی پیاری اور مزیدار شیرینگ کی ھے ۔
    مزید اچھی شیرینگ کا انتیظار رھے گا
    اپ کا بہت بہت شکریہ
    33agebo.gif
     

Share This Page