1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Tere Ishq Nachaya Karke Thaiyya Thaiyya

Discussion in 'Sufiyana Kalaam' started by PakArt, Jan 8, 2017.

  1. PakArt

    PakArt May Allah bless all Martyre of Pakistan Staff Member

    تیرے عشق نچایا کر کے تھیّا تھیّا
    تیرے عشق نچایا کر کے تھیّا تھیّا
    تیرے عشق نے ڈیرا، میرے اندر کیتا
    بھر کے زہر پیالہ، میں تاں آپے پیتا
    جھبدے بوہڑیں وے طبیبا، نہیں تاں میں مر گئی آ

    تیرے عشق نچایا کر کے تھیّا تھیّا

    چھپ گیا وے سُورج، باہر رہ گئی آ لالی
    وے میں صدقے ہوواں، دیویں مُڑ جے وکھالی
    پیرا! میں بُھل گئی آں، تیرے نال نہ گئی آ

    تیرے عشق نچایا کر کے تھیّا تھیّا

    ایس عشقے دے کولوں، مینوں ہٹک نہ مائے
    لاہُو جاندڑے بیرے، کیہڑا موڑ لیائے
    میری عقل جو بُھلّی، نال مہانیاں دے گئی آ

    تیرے عشق نچایا کر کے تھیّا تھیّا

    ایس عشقے دی جھنگی وچ مور بولیندا
    سانوں قبلہ تے کعبہ، سوہنا یار دسیندا
    سانوں گھائل کر کے، پھیر خبر نہ لئی آ

    تیرے عشق نچایا کر کے تھیّا تھیّا

    بُلھّا شَوہ نے آندا، مینوں عنایت دے بُوہے
    جس نے مینوں پوائے ، چولے ساوے تے سُوہے
    جاں میں ماری ہے اَڈّی، مِل پیا ہے وہیّا

    تیرے عشق نچایا کر کے تھیّا تھیّا
     
  2. Azizshakir

    Azizshakir Designer Staff Member

    ماشاءاللہ
    جزاک اللہ
    بہت ہی لاجواب شیئرنگ کی​
     
    PakArt likes this.

Share This Page