1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔
  2. آئی ٹی استاد کے لیے ٹیم ممبرز کی ضرورت ہے خواہش مند ممبرز ایڈمن سے رابطہ کریں
    Dismiss Notice
  3. آئی ٹی استاد عید آفر
    Dismiss Notice

ﮦ ﻭﻗﺖ ﺁﮔﯿﺎ ﺟﺲ ﮐﺎ ﮈﺭ ﺗﮭﺎ


آئی ٹی استاد کی ںئی ایپ ڈاونلوڈ کریں اور آئی ٹی استاد ٹیلی نار اور ذونگ نیٹ ورک پر فری استمال کریں

itustad

Discussion in 'General Knowledge' started by lodhi13, Aug 5, 2017.

General Knowledge"/>Aug 5, 2017"/>

Share This Page

  1. lodhi13
    Offline

    lodhi13 Lover
    • 8/8

    ﻭﮦ ﻭﻗﺖ ﺁﮔﯿﺎ ﺟﺲ ﮐﺎ ﮈﺭ ﺗﮭﺎ، ﺩﻧﯿﺎ ﮐﯽ ﺷﺮﻣﻨﺎﮎ ﺗﺮﯾﻦ ﭼﯿﺰ
    ﻣﺎﺭﮐﯿﭧ ﻣﯿﮟ ﻓﺮﻭﺧﺖ ﮐﯿﻠﺌﮯ ﭘﯿﺶ ﮐﺮﺩﯼ ﮔﺌﯽ
    05 ﺍﮔﺴﺖ 2017 ‏( 18:38 ‏)
    ﻣﯿﮉﺭﮈ ‏( ﻣﺎﻧﯿﭩﺮﻧﮓ ﮈﯾﺴﮏ‏) ﭨﯿﮑﻨﺎﻟﻮﺟﯽ ﮐﯽ ﺗﺮﻗﯽ ﻧﮯ ﯾﻘﯿﻨﺎ
    ﺍﻧﺴﺎﻧﯽ ﺯﻧﺪﮔﯽ ﮐﻮ ﭘﺮﺁﺳﺎﺋﺶ ﺑﻨﺎ ﺩﯾﺎ ﮨﮯ ﻟﯿﮑﻦ ﮐﭽﮫ
    ﺳﺎﺋﻨﺴﺪﺍﻥ ﭨﯿﮑﻨﺎﻟﻮﺟﯽ ﮐﻮ ﺍﯾﮏ ﺷﺮﻣﻨﺎﮎ ﺳﻤﺖ ﻣﯿﮟ ﺗﺮﻗﯽ
    ﺩﮮ ﮐﺮ ﺍﻧﺴﺎﻧﯿﺖ ﮐﻮ ﺍﺧﻼﻕ ﺑﺎﺧﺘﮧ ﺑﻨﺎﻧﮯ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﮐﻮﺋﯽ ﮐﺴﺮ
    ﻧﮩﯿﮟ ﭼﮭﻮﮌ ﺭﮨﮯ۔ ﺍﯾﺴﮯ ﮨﯽ ﺍﯾﮏ ﺳﺎﺋﻨﺴﺪﺍﻥ ﻧﮯ ﭘﮩﻠﯽ ﺑﺎﺭ ﺍﭘﻨﯽ
    ﺍﯾﮏ ﺷﺮﻣﻨﺎﮎ ﺗﺨﻠﯿﻖ ﻓﺮﻭﺧﺖ ﮐﮯ ﻟﯿﮯ ﭘﯿﺶ ﮐﺮ ﺩﯼ ﮨﮯ۔ ﯾﮧ
    ﺗﺨﻠﯿﻖ ’ ﺟﻨﺴﯽ ﺭﻭﺑﻮﭦ ‘ ﮨﮯ۔ ﮈﯾﻠﯽ ﺳﭩﺎﺭ ﮐﯽ ﺭﭘﻮﺭﭦ ﮐﮯ
    ﻣﻄﺎﺑﻖ ﯾﮧ ﺭﻭﺑﻮﭦ ﺳﭙﯿﻦ ﮐﮯ ﺷﮩﺮ ﺑﺎﺭﺳﯿﻠﻮﻧﺎ ﮐﮯ ﻣﺎﮨﺮﮈﺍﮐﭩﺮ
    ﺳﺮﮔﺌﯽ ﺳﯿﻨﺘﻮﺱ ﻧﮯ ﺍﯾﺠﺎﺩ ﮐﯿﺎ ﮨﮯ۔ ﺭﻭﺑﻮﭦ ﮐﯿﺎ ﮨﮯ، ﺑﻨﯽ
    ﺑﻨﺎﺋﯽ ﺣﺴﯿﻨﮧ ﮨﮯ ﺟﻮ ﻣﺮﺩﻭﮞ ﮐﻮ ﺟﺴﻤﺎﻧﯽ ﺗﺴﮑﯿﻦ ﻓﺮﺍﮨﻢ
    ﮐﺮﻧﮯ ﮐﮯ ﻟﯿﮯ ﺑﻨﺎﺋﯽ ﮔﺌﯽ ﮨﮯ۔ ﮐﺌﯽ ﻣﺨﺘﻠﻒ ﻃﺮﯾﻘﻮﮞ ﺳﮯ
    ﺟﻨﺴﯽ ﻋﻤﻞ ﺳﺮﺍﻧﺠﺎﻡ ﺩﯾﻨﮯ ﮐﮯ ﻟﯿﮯ ﺍﺱ ﺭﻭﺑﻮﭦ ﻣﯿﮟ 8 ﻣﻮﮈ
    ﺷﺎﻣﻞ ﮐﯿﮯ ﮔﺌﮯ ﮨﯿﮟ۔
    ﺁﺩﻣﯽ ﺟﺴﻢ ﻓﺮﻭﺵ ﻟﮍﮐﯽ ﮐﮯ ﻋﺸﻖ ﻣﯿﮟ ﮔﺮﻓﺘﺎﺭ، ﺷﺎﺩﯼ
    ﮐﺮﻟﯽ ﻟﯿﮑﻦ ﭘﮭﺮ ﺷﺎﺩﯼ ﮐﮯ ﭼﻨﺪ ﺩﻥ ﺑﻌﺪ ﮨﯽ ﺩﻟﮩﻦ ﻧﮯ ﭼﭙﮑﮯ
    ﺳﮯ ﮐﯿﺎ ﮐﺎﻡ ﮐﺮ ﮈﺍﻻ؟ ﺟﺎﻥ ﮐﺮ ﮨﺮ ﺷﻮﮨﺮ ﮐﮯ ﮨﻮﺵ ﺍُﮌﺟﺎﺋﯿﮟ
    ﮐﯿﻮﻧﮑﮧ۔۔۔
    ﺭﭘﻮﺭﭦ ﮐﮯ ﻣﻄﺎﺑﻖ ﮈﺍﮐﭩﺮ ﺳﯿﻨﺘﻮﺱ ﻧﮯ ﮐﺌﯽ ﻣﺎﮦ ﭘﮩﻠﮯ ﯾﮧ
    ﺑﻮﻟﻨﮯ ﻭﺍﻻ ’ ﻓﯽ ﻣﯿﻞ ﺍﯾﻨﮉﺭﺍﺋﯿﮉ ‘ ﺭﻭﺑﻮﭦ ﺗﯿﺎﺭ ﮐﯿﺎ ﺗﮭﺎ ﺍﻭﺭ ﺍﺏ
    ﺍﺱ ﻣﯿﮟ ﻣﺰﯾﺪ ﮐﺌﯽ ﺗﺒﺪﯾﻠﯿﺎﮞ ﮐﺮﮐﮯ ﺍﺳﮯ ﭘﮩﻠﯽ ﺑﺎﺭ ﻓﺮﻭﺧﺖ
    ﮐﮯ ﻟﯿﮯ ﭘﯿﺶ ﮐﺮ ﺩﯾﺎ ﮔﯿﺎ ﮨﮯ۔ ﺍﺱ ﮐﯽ ﻗﯿﻤﺖ 3300ﮈﺍﻟﺮ
    ‏( ﺗﻘﺮﯾﺒﺎً3 ﻻﮐﮫ47 ﮨﺰﺍﺭ ﺭﻭﭘﮯ ‏) ﮨﮯ۔ﮈﺍﮐﭩﺮ ﺳﯿﻨﺘﻮﺱ ﻧﮯ ﺍﺱ
    ﺭﻭﺑﻮﭦ ﮐﯽ ﺻﻨﻌﺘﯽ ﭘﯿﻤﺎﻧﮯ ﭘﺮ ﺗﯿﺎﺭﯼ ﮐﮯ ﻟﯿﮯ ﭼﯿﻨﯽ ﮐﯽ ﺍﯾﮏ
    ﺟﻨﺴﯽ ﮔﮍﯾﺎﺋﯿﮟ ﺑﻨﺎﻧﮯ ﻭﺍﻟﯽ ﻓﯿﮑﭩﺮﯼ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﺍﺷﺘﺮﺍﮎ ﮐﺮ ﻟﯿﺎ
    ﮨﮯ ﺟﻮ ﮨﻔﺘﮯ ﻣﯿﮟ 50 ﺭﻭﺑﻮﭦ ﺑﻨﺎ ﮐﺮ ﺩﮮ ﮔﯽ ﺍﻭﺭ ﯾﮧ ﺩﻧﯿﺎ ﺑﮭﺮ
    ﻣﯿﮟ ﻓﺮﻭﺧﺖ ﮐﯿﮯ ﺟﺎﺋﯿﮟ ﮔﮯ۔
    ﮈﺍﮐﭩﺮ ﺳﯿﻨﺘﻮﺱ ﮐﺎ ﮐﮩﻨﺎ ﮨﮯ ﮐﮧ ” ﯾﮧ ﺭﻭﺑﻮﭦ ﺑﺎﻟﮑﻞ ﮐﺴﯽ
    ﺧﻮﺑﺼﻮﺭﺕ ﻋﻮﺭﺕ ﮐﯽ ﻃﺮﺡ ﺩﮐﮭﺎﺋﯽ ﺩﯾﺘﺎ ﮨﮯ۔ ﺍﺱ ﮐﮯ ﺳﺮ
    ﻣﯿﮟ ﺍﯾﮏ ﮐﻤﭙﯿﻮﭨﺮ ﻧﺼﺐ ﮐﯿﺎ ﮔﯿﺎ ﮨﮯ ﺟﺲ ﻣﯿﮟ ﻟﮕﺎ ﺍﯾﺲ ﮈﯼ
    ﮐﺎﺭﮈ ﺍﺱ ﺭﻭﺑﻮﭦ ﮐﮯ ﻣﯿﻤﻮﺭﯼ ﺑﺮﯾﻦ ‏( ﺩﻣﺎﻍ‏) ﮐﺎ ﮐﺎﻡ ﺩﮮ ﮔﺎ۔ﺍﺱ
    ﮐﻤﭙﯿﻮﭨﺮ ﮐﻮ ﺭﻭﺑﻮﭦ ﮐﮯ ﭘﻮﺭﮮ ﺟﺴﻢ ﺳﮯ ﻣﻨﺴﻠﮏ ﮐﯿﺎ ﮔﯿﺎ ﮨﮯ
    ﺟﺲ ﺳﮯ ﯾﮧ ﺍﻧﺴﺎﻧﻮﮞ ﮐﮯ ﭼﮭﻮﻧﮯ ﮐﺎ ﻟﻤﺲ ﺑﮭﯽ ﻣﺤﺴﻮﺱ ﮐﺮ
    ﺳﮑﺘﺎ ﮨﮯ۔ﺍﺱ ﮐﮯ ﺟﺴﻢ ﻣﯿﮟ ﮐﺌﯽ ﭘﺮﯾﺸﺮ ﭘﻮﺍﺋﻨﭩﺲ ﮨﯿﮟ ﺟﻮ
    ﺍﻧﺴﺎﻧﯽ ﺟﺴﻢ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﻣَﺲ ﮨﻮﻧﮯ ﭘﺮ ﺭﺩﻋﻤﻞ ﺩﯾﻨﮯ ﮐﯽ
    ﺻﻼﺣﯿﺖ ﺭﮐﮭﺘﮯ ﮨﯿﮟ۔ﺟﻨﺴﯽ ﻋﻤﻞ ﮐﮯ ﺩﻭﺭﺍﻥ ﯾﮧ ’ ﺧﺎﺗﻮﻥ
    ﺭﻭﺑﻮﭦ ‘ ﺑﻮﻝ ﮐﺮ ﻣﺨﺘﻠﻒ ’ ﻋﻮﺍﻣﻞ ‘ ﮐﮯ ﻣﺘﻌﻠﻖ ﺑﺘﺎﺋﮯ ﮔﯽ ﺍﻭﺭ
    ﺑﺎﻟﮑﻞ ﺍﺻﻠﯽ ﻋﻮﺭﺕ ﺟﯿﺴﮯ ﺭﻭﺋﯿﮯ ﮐﺎ ﻣﻈﺎﮨﺮﮦ ﮐﺮﮮ ﮔﯽ۔ “
     

Share This Page