1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔
  2. آئی ٹی استاد کے لیے ٹیم ممبرز کی ضرورت ہے خواہش مند ممبرز ایڈمن سے رابطہ کریں
    Dismiss Notice
  3. Dismiss Notice

Ishq E Bismil


آئی ٹی استاد کی ںئی ایپ ڈاونلوڈ کریں اور آئی ٹی استاد ٹیلی نار اور ذونگ نیٹ ورک پر فری استمال کریں

itustad

Discussion in 'Meri passand ki poetry' started by Wajahat, Aug 7, 2017.

Meri passand ki poetry"/>Aug 7, 2017"/>

Share This Page

  1. Wajahat
    Offline

    Wajahat VIP Member Staff Member
    • 18/33

    ﺷﻮﺭ ﮨﮯ ﮨﺮ ﻃﺮﻑ ﺳﺤﺎﺏ ﺳﺤﺎﺏ
    ﺳﺎﻗﯿﺎ ! ﺳﺎﻗﯿﺎ ! ﺷﺮﺍﺏ ! ﺷﺮﺍﺏ
    ﺁﺏِ ﺣﯿﻮﺍﮞ ﮐﻮ ﻣَﮯ ﺳﮯ ﮐﯿﺎ ﻧﺴﺒﺖ !
    ﭘﺎﻧﯽ ﭘﺎﻧﯽ ﮨﮯ ﺍﻭﺭ ﺷﺮﺍﺏ ﺷﺮﺍﺏ !
    ﺭﻧﺪ ﺑﺨﺸﮯ ﮔﺌﮯ ﻗﯿﺎﻣﺖ ﻣﯿﮟ
    ﺷﯿﺦ ﮐﮩﺘﺎ ﺭﮨﺎ ﺣﺴﺎﺏ ﺣﺴﺎﺏ
    ﺍﮎ ﻭﮨﯽ ﻣﺴﺖِ ﺑﺎ ﺧﺒﺮ ﻧﮑﻼ
    ﺟﺲ ﮐﻮ ﮐﮩﺘﮯ ﺗﮭﮯ ﺳﺐ ﺧﺮﺍﺏ ﺧﺮﺍﺏ
    ﻣﺠﮫ ﺳﮯ ﻭﺟﮧِ ﮔﻨﺎﮦ ﺟﺐ ﭘﻮﭼﮭﯽ
    ﺳﺮ ﺟﮭﮑﺎ ﮐﮯ ﮐﮩﺎ ﺷﺒﺎﺏ ﺷﺒﺎﺏ
    ﺟﺎﻡ ﮔﺮﻧﮯ ﻟﮕﺎ، ﺗﻮ ﺑﮩﮑﺎ ﺷﯿﺦ
    ﺗﮭﺎﻣﻨﺎ ! ﺗﮭﺎﻣﻨﺎ ! ﮐﺘﺎﺏ ! ﮐﺘﺎﺏ !
    ﮐﺐ ﻭﮦ ﺁﺗﺎ ﮨﮯ ﺳﺎﻣﻨﮯ ﮐﺸﻔﯽ
    ﺟﺲ ﮐﯽ ﮨﺮ ﺍﮎ ﺍﺩﺍ ﺣﺠﺎﺏ ﺣﺠﺎﺏ
    ‏( ﮐﺸﻔﯽ ﻣﻠﺘﺎﻧﯽ ‏)
     

Share This Page