1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Piyar Nibhany walay

Discussion in 'Roman Urdu Poetry' started by UmerAmer, Oct 5, 2013.

  1. UmerAmer

    UmerAmer VIP Member

    Lamha Bhar Apna Hawaon Ko Bananay Waalay

    Ab Na Aayein Ge Palat Kar Kubhi Jaanay Waalay

    Kia Milay Ga Tujhe Bikhray Howay Khwaabon Ke Siwa?

    Ay Rait Pe Chaand Ki Tasveer Banaanay Waalay

    Sab Ne Pehna Tha Baday Shoq Se Kaghaz Ka Libaas

    Jis Qadar Loog Thay Baarish Mein Nahaanay Waalay

    Mar Gaye Hum Tou Ye Qutbay Pe Likha Jaye Ga

    So Gaye Aap Zamaanay Ko Jagaanay Waalay

    Dar-o-Deewaar Pe Hasrat Si Barasti Hai “Qateel”

    Jaanay Kis Dais Gaye Pyaar Nibhaanay Waalay ?
     
  2. Bohat khoob.........Undah sharing
     
  3. Very umda
    bohat nice.
     

Share This Page