1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

مجھے ایک دھوبن نے توحید سکھائی

Discussion in 'History aur Waqiat' started by PRINCE SHAAN, Nov 12, 2013.


  1. حضرت حسن بصری فرماتے تھے کہ مجھے ایک دھوبن نے توحید سکھائی۔ کسی نے پوچھا حضرت وہ کیسے؟ فرمانے لگے کہ میرے ہمسائے میں ایک دھوبی رہتا تھا۔ میں ایک مرتبہ اپنے گھر کی چھت پر بیٹھا گرمی کی رات میں قرآن پاک کی تلاوت کر رہا تھا۔ ہمسایہ سے میں نے ذرا اونچا اونچا بولنے کی آواز سنی، پوچھا کہ بھائی خیریت تو ہے کیوں اونچا بول رہے ہو؟ جب غور سے سنا تو مجھے پتہ چلا کہ بیوی اپنے میاں سے جھگڑ رہی تھی وہ اپنے خاوند کو کہہ رہی تھی کہ دیکھ تیری خاطر میں تکلیفیں برداشت کرنے کو تیار ہوں لیکن اگر تو چاہے کہ میرے سوا کسی اور سے نکاح کرلے تو پھر میرا تیرا گزارا نہیں ہوسکتا میں تیرے ساتھ کبھی نہیں رہ سکتی۔ فرماتے ہیں کہ یہ بات سن کر میں نے قرآن پر نظر ڈالی تو قرآن مجید کی آیت سامنے آئی۔
    اللہ تعالی فرماتے ہیں : ترجمہ: کہ اے میرے بندے تو جو بھی گناہ لے کر آئے گا میں چاہوں گا سب معاف کر دونگا لیکن میری محبت میں کسی کو شریک بنائے گا تو پھر میرا تیرا گزارا نہیں ہوسکتا۔
    (سورۃ النساء آیت ۱۱


     
  2. IQBAL

    IQBAL Cruise Member

    جزاک الله خیر
    بہت زبردست شیئرنگ ہے
     

Share This Page