1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Hawas naseeb e nazar ko kahien qarar nahi,

Discussion in 'Roman Urdu Poetry' started by Mohammad Sajjad, Jan 1, 2014.

  1. Hawas naseeb e nazar ko kahien qarar nahi,
    Main muntazir hun magar tera intazar nahi,​
    Humi say rang e gulistan humi say rang e bahar,
    Humi ko nazm e gulistan pey ikhtayar nahi,​
    Abhi na cher mohabbat kay geet ay matrab,
    Abhi hayat ka mahool khushgawar nahi,​
    Tumharey ehad e wafa ko main ehad kya samjhon,
    Mujhey khud apni mohabbat ka aitbar nahi,​
    Na janey kitney giley is me muztarib hain nadeem,
    Wo ek dil kisi ka gila guzar nahi,​
    Gurez ka nahi qail hayat sey lekin,
    Jo sach kahon to mujhey maot nagwar nahi,​
    Ye kis muqaam pey pohncha dia zamaney ney,
    Kay ab hayat pey tera bhi ikhtayar nahi.​
     
  2. Net KiNG

    Net KiNG VIP Member

  3. UmerAmer

    UmerAmer VIP Member

    bohat umda sharing
     

Share This Page