1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

مشکلات کا شکار ہونے کا مطلب

Discussion in 'Quran e Kareem' started by PRINCE SHAAN, Feb 4, 2014.

  1. [​IMG]

    مشکلات کا شکار ہونے کا مطلب

    کیا مشکلات کا شکار ہونے کا مطلب یہ ہے کہ ہم گناہگار ہیں ؟
    جی نہیں مشکلات کا شکار ہونے کا لازمی مطلب یہ نہیں کہ یہ آپ کے گناہوں کا نتیجہ ہے ۔
    سورۃ الشرح کی جو دو آیتیں ہیں

    فَإِنَّ مَعَ الْعُسْرِ* يُسْرً*ا ﴿٥﴾ إِنَّ مَعَ الْعُسْرِ* يُسْرً*ا
    ہر مشکل کے ساتھ آسانی ہے ، بےشک مشکل کے ساتھ آسانی ہے ۔۔۔ سورۃ الشرح

    وہ اللہ کے نبی حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی تسلی کے لیے اتری تھیں ۔ اس کا مطلب ہے کہ مشکلات کا شکار دنیا کے نیک انسان بھی ہوتے رہے ہیں ۔
    اگر کوئی کسی لمحے گناہ کر بیٹھا ہے تو اس سے نکلنا اس سے اگلے لمحے ہی ممکن ہے : توبہ کر کے ، اللہ سے معافی مانگ کر ، اس گناہ کو فورا چھوڑ کر ۔۔۔
    کیا ہم اسی مہربان رب کے بندے نہیں جس نے اپنی کتاب میں کہا ہے :
    "میری جانب سے) کہہ دو کہ اے میرے بندو! جنہوں نے اپنی جانوں پر زیادتی کی ہے تم اللہ کی رحمت سے ناامید نہ ہو جاؤ، بالیقین اللہ تعالیٰ سارے گناہوں کو بخش دیتا ہے، واقعی وه بڑی بخشش بڑی رحمت واﻻ ہے" ۔ سورۃ الزمر آیت ۵۳
    توبہ و استغفار کا سب سے پہلا فائدہ یہی ہے کہ یہ روح پر پڑے سب بوجھ دھو دیتے ہیں ۔۔۔ آئیے آج سے اپنی روحوں کو ہلکا پھلکا بنانے کی ابتدا کریں ۔۔۔ روزانہ توبہ ، روزانہ استغفار ، روزانہ تجدید عہد کہ ہم سیدھی راہ کے مسافر ہیں ۔۔


    [​IMG]
     
  2. Net KiNG

    Net KiNG VIP Member

    Jazak Allah Khair
     
  3. IQBAL

    IQBAL Cruise Member

  4. ~Asad~

    ~Asad~ Management

    بہت عمدہ مزید انتظار رہے گا
     

Share This Page