1. السلام علیکم
    آئی ٹی استاد ڈاٹ کام وزٹ کرنے کا شکریہ۔ ہم آپکو خوش آمدید کہتے ہیں۔ فورم کے کسی بھی حصے کو استعمال میں لانے جیسے پوسٹنگ کرنے، کوئی تھریڈ دیکھنے یا لکھنے کسی بھی ممبر سے رابطہ کرنے کے لئے اور فورم کے دیگر آلات وغیرہ کا استعمال کرنے کے لئے آپکا رجسٹر ہونا ضروری ہے۔ رجسٹر ہونے کے لئے یہاں کلک کریں۔ رجسٹریشن حاصل کرنا بالکل آسان اور بالکل مفت ہے۔

Aankhain Khuwab Dekhti Hain

Discussion in 'Roman Urdu Poetry' started by Jal Pari, May 20, 2014.

  1. Jal Pari

    Jal Pari Guest

    Aankhain khuab dekhti hain
    Kisi say mil janey ka
    Ya khud ko kho denay ka
    Tanha reh janay ka
    Khud ko aar denay ka,
    Chahat haar denay ka

    Aankhain khuab dekhti hain

    Bichray huye lamhon ka
    Kisi raastay per mil janay ka
    Zakhmon kay sil janey ka
    Zamanay kay guzer janay ka
    Khuab kay hasil ki haqeeqat ka
    Haqeeqat ka khuwab main tehleel honay ka
    Bikhray khuabon ki takmeel ka
    Tum to khud ik khuwab ho
    Husn ka, jawani ka
    Ik dard bhari kahani ka!!
     
  2. Net KiNG

    Net KiNG VIP Member

    بہت عمدہ شئیرنگ ہے۔۔
    کیپ اٹ اپ​
     
  3. UmerAmer

    UmerAmer VIP Member

    Very Nice
    Keep it up
     
  4. نمرہ

    نمرہ Management

    nice sharing
     
  5. ~Asad~

    ~Asad~ Management

    بہت عمدہ اپ کا بہت بہت شکریہ
     

Share This Page